شانگلہ میں خودکش حملے میں 5چینی انجینئرز سمیت 6افراد جاں بحق ہو گئے

نجی ٹی وی چینلزکے مطابق ڈی آئی جی مالاکنڈ کا کہنا ہے کہ بشام کے مقام پر چینی باشندوں کی گاڑی پر خودکش حملہ  ہوا ہے، خودکش حملے میں 5چینی باشندوں سمیت 6افراد ہلاک ہوئے ،ڈی آئی جی مالا کنڈ کا مزیدکہناتھا کہ حملے میں چینی انجینئرز ہلاک ہوئے ،خودکش بمبار نے بارود سے بھری گاڑی چینی مسافروں کی گاڑی سے ٹکرائی ۔

پاکستان کے صوبہ خیبرپختونخوا کے ضلع شانگلہ کے علاقے بشام میں مبینہ خودکش حملہ آور نے بارود سے بھری گاڑی چینی انجینیئرز کی گاڑی سے ٹکرا دی جس کے نتیجے میں پانچ چینی باشندوں سمیت 6 افراد ہلاک ہو گئے۔

بشام سے پولیس اہلکاروں نے بتایا کہ چینی انجینیئرز ایک قافلے کی شکل میں داسو ڈیم کی جانب جا رہے تھے۔ ضلع شانگلہ میں بشام کے علاقے میں رودکی کیچ کے مقام پر دوسری گاڑی میں سوار خود کش حملہ آور نے چائنیز کی گاڑی کو ٹکر ماری جس سے دھماکہ ہوا اور گاڑی کھائی میں گر گئی۔

ریسکیو 1122 اہلکاروں کے مطابق دھماکے کے باعث گاڑی میں آگ لگ گئی تھی جسے بجھا دیا گیا ہے۔ اس کے علاوہ مزید ٹیمیں موقع پر پہنچ رہی ہیں۔

واضح رہے کہ یہ علاقہ ضلع کوہستان اور ضلع شانگلہ کی سرحد پر واقع ہے اور ان علاقوں میں چینی انجینیئرز مختلف منصوبوں پر کام کر رہے ہیں۔

مقامی پولیس اہلکار بخت ظاہر نے بتایا کہ چینی ٹیم میں چار مرد اور خاتون شامل تھیں جبکہ ان کی گاڑی کے ڈرائیور ایک پاکستانی شہری تھے۔

انھوں نے کہا کہ حملہ آور نے بارود سے بھری گاڑی چینی انجینیئرز کی گاڑی سے ٹکرائی۔ اس واقعے کے بعد پولیس حکام سمیت بھاری نفری موقع پر پہنچ گئی۔

اس سے پہلے 2021 میں بھی داسو ہائیڈل پاور ڈیم پر کام کرنے والے چینی انجینیئرز کی گاڑی پر حملہ کیا گیا تھا جس میں 9 چینی انجینیئرز سمیت 12 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔ یہ حملہ بھی داسو ڈیم پر کام کرنے والے غیر ملکی انجینیئرز پر کیا گیا تھا۔

ڈی ایس پی جمعہ الرحمن نے بی بی سی کے نامہ نگار عثمان زاہد سے ٹیلیفون پر بات کرتے ہوئے تصدیق کی کہ اس خودکش حملے میں پانچ چینی باشندے جبکہ ایک پاکستانی شہری ہلاک ہوا۔

واضح رہے کہ داسو میں ایک بڑا ڈیم واقع ہے، اس علاقے پر ماضی میں بھی دہشت گردوں کی جانب سے حملے ہوتے رہے ہیں، 2021 میں ایک بس میں ہونے والے دھماکے میں 9 چینی شہریوں سمیت 13 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

By Admin

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *